Perceptions of Students from Southbound Countries

Read about the perception of students from soutbound countries to share the insight of studying in Taiwan.

Bhat Sikandar Sultan/ National Chung Cheng University

Nationality : India
Major : Advanced Manufacturing

IMG_2252 - SIKANDAR SULTAN_edi.jpg
 

I start with Islamic greetings: Assalamualaikum Warahmatullahi Wabarakatuh which means “Peace be upon you and God’s mercy and blessings.”, my name is SIKANDAR SULTAN and my Chinese name is 伯思廷. I am 24 years old and come from JAMMU & KASHMIR, INDIA which is the center of natural beauty, known as Paradise on earth. I am pursuing my master's in Advanced Manufacturing from the AIM-HI department of National Chung Cheng University, Chiayi. I am Muslim by religion. I love making new friends and I am very much happy to live along with kind, welcoming and cheerful Taiwanese friends. I am very motivated by new cutting-edge technologies and enthusiastic to learn new technologies. I like playing sports like Volleyball, football, cricket, badminton, table tennis.

السَّلاَمُ عَلَيْكُمْ وَرَحْمَةُ اللهِ وَبَرَكَاتُهُ میرا نام سکندر سلطان بٹ ہے اور میرا چینی نام [ بو سی ٹینج]  ہے. میں جو بیس ۲۴ سال کاہوں اور جموں وکشمیر، ہندوستان سے آیا ہوں جو فطری طور خوبصورتی کا مرکز ہے،جسے زمین پر جنت کہا جاتا ہے، میں اپنا ماسٹرز- کورس ایڈوانس مینوفیکچرنگ میں تعاقب کر رہا ہوں، نیشنل جنگ چینگ      یونیورسٹی تایوان شعبہ [ایم ہی] ۔ میں مذہب کے لحاظ سے مسلمان ہوں، مجھے نیے دوست بنا نا پسند ہے، اور میں خوش قسمت، خوش آمدید، خوش مزاج تایوان دوستوں کے ساتھ  طویل عرصہ تک مل جل کر رہنا پسند کررہا ہوں، ٹیکنالوجیز اور نیی ٹیکنالوجیز سیکھنے کے لئے پر جو ش ہوں، میں والی بال، کرکٹ ، بیڈمنٹن جیسی کھیل کھیلنا پسند کرتا ہوں۔

————————————————————————————————————————————————————————————————————————

1. What made you decide to study in Taiwan?

(English)

I feel fortunate enough to get admission in AIM-HI (Advanced Institute of Manufacturing with high tech innovation) Department of National Chung Cheng University. The main driving force for me to choose Taiwan as next destination to study was AIM-HI, the name in itself explains everything, at AIM-HI I got the opportunity to explore my field of interest to the fullest, the faculty, infrastructure, high-class labs offer all the required facilities to take my career to next level. I am truly grateful to have an opportunity to study in Taiwan. Taiwan apart from providing with the opportunity of higher studies also opened the horizon of a friendly environment and wonderful culture. Last but not least above the kind, loving, trustworthy, helpful, hospitable and great humanitarian nature of Taiwanese people is what I love most and made my decision of choosing Taiwan easy.

(Indian)

میں کافی خوش قسمت محسوس کر رہا ہوں کہ [ایم ہی] (ہایی ٹیک انو ویشن کے ساتھ مینو فیکچرنگ کا جدید انسٹی ٹیوٹ )  نیشنل چنگ چینگ یونیورسٹی کے شعبہ میں داخلہ ھوا۔  میرے لیے تایوان کا انتخاب کرنے کی اصل محرک [ایم ہی]  تھا۔ نام خود ہی ہر چیز کی وضاحت کرتا ہے۔مجھے اپنے دلچسپی کے شعبہ کو پوری طرح سے دریافت کرنے کا موقع ملا۔آساتذہ ، انفراسٹرکچر،اعلی ا درجے تک لے جانے کے لئے تمام مطلوبہ سہولیات کے پیش کش کرتی ہے۔میں واقعتاً اس کا شکر گزار ہوں کہ اعلیٰ تعلیم کے موقع نے بھی اس کا افتتاح کیا.دوستانہ ماحول اور حیرت انگیز ثقافت کا افق بھی کھولا.آخری لیکن محدود نھہ، تایوان کی لوگوں ھر طرح مہربان، محبت کر نے والا ،قابل اعتماد،مددگار،مہمان نواز اور اعظیم انسانیت سے بالا تر ہے اور اسی چیز کو میں سب سے زیادہ پسند کرتا ہوں اور تایوان کے انتخابات کا فیصلہ آسان بنا دیا

2.  Briefly tell us about the program you are studying. What subjects are you studying? What have you enjoyed the most in your studies?
(English)

I am enrolled in the AIM-HI department (Advanced Institute of Manufacturing with high tech innovation) and I am studying in machining and automation lab, my advisor is presently working on virtual reality collaboration on machine tools, we are working to integrate the virtual reality technology on machining and manufacturing technology, thus making industrial 4.0 more powerful and real. So far I learned so many subjects from coursework and lab, like computer-aided design, computer numerical control and integrated technology, PC-NC structure and learned software like CUT PRO, Solidworks, and c# on visual studio. I enjoyed learning the CAD the most and learned the logic behind the geometries. I like the education system of Taiwan which lets students choose courses of their interest.

(Indian)

میں[ایم ہی]  میں داخلہ لے چکا ہوں اور میں میشینی اور آٹومیشن لیب میں تعلیم حاصل کر رہا ہوں ، میرا مشیر اس وقت مشینی اوزار پر ورچویل ریلیٹی تعاون پر کام کر رہا ہے،اس طرح صنعتی٤.٠زیادہ طاقتور اور اصلی ہے، تو اب تک میں نے کورس ورک اور لیب سے بہت سے مضامین سیکھے جیسے کمپیوٹر سے تعاون یافتہ ڈیزائن، کمپیوٹر عددی کنٹرول اور مربوط ٹیکنالوجی،پی سی این سی ڈھانچہ اور[کٹ پرو] [ سالٹ ورک] اور[سی #]جیسے سافٹ بصری سٹوڈیو پر سیکھا،میں نے سب سے زیادہ اوٹو- کیٹ سیکھنے میں لطف اٹھایا اور جیو میٹریوں کے پیچھے منطق سیکھی ، مجھے تایوان کا تعلیمی نظام پسند ہیں جو طلباء کو اپنی دلچسپی کے کورس کا انتخاب کرنے دیتا ہے

3. How is studying in Taiwan when compared to studying and being a student in your home country? (Teaching Quality、Environment、School Equipment、Laboratory or others)

(English)

The study experience in Taiwan is different than in my country. The teaching standard Is much better than my country, the guidance from renowned and experienced professors is value-adding, the way of course selection is what amused me most, here we got a chance to choose courses of our interest but in our country, they are fixed and constant. The study environment is so friendly and helpful. The high tech labs and advanced purpose classrooms at AIM-HI are the best I have seen so far. The facilities available here at every Taiwan university makes the study so easy and comprehensive than my country.

(Indian)

تایوان میں مطالعہ کا تجربہ میرے ملک سے بہتر ہے، تعلیم کا معیار میرے ملک سے بہتر ہے،نامور اور تجربہ کار پروفیسر ز کی رہنمائی قابلِ قدر ہے، کورس کے انتخابات کا طریقہ ہی مجھے سب سے زیادہ خوش کیا،یہاں ہمیں ایک موقعہ ملا ہماری دلچسپی کورس کا انتخاب کریں ، لیکن ہمارے ملک میں وہ مستقل ہے،مطالعہ کا ماحول اتنا ہی دستانہ اور مددگار ہے،میں نے ابھی تک [ایم ہی] میں اعلیٰ ٹیک لیبز اور جدید مقصد کے کلاس روم دیکھے ہے، دستیاب سہولیات یہاں ہر تا یوآن یونیورسٹی میں مطالعہ میرے ملک سے کہی ذیادہ آسان اور وسیع بنارہی ہے۔

4.  What has been the most difficult part about applying to study in Taiwan? How did you overcome the difficulty?

(English)

The application process available at my university is easy and student-friendly. I did not find is much difficult to go through the application process. Although I faced some minor challenges that while the last phase of the application process I was not able to upload the important required documents because the website server was having some problem, but the efforts of Office of international affairs are appreciable as I brought it to their notice and they resolved it as soon as possible, I feared that I missed the last date and the cooperation of OIA was all that I needed. The OIA also promptly helped me with all the documents required for application by continuous guidance.

(Indian)

میری یونیورسٹی میں دستیاب درخواست کا عمل آسان اور دوستانہ ہے ، مجھے درخواست کے عمل سے گزرنا زیادہ مشکل نہیں تھا۔اگر چہ مجھے کچھ معمولی چلینجوں کا سامنا کرنا پڑا، میں اہم دستاویزات اپ لوڈ کرنےکے قابل نہیں تھا کیونکہ ویب سائٹ سیور میں کچھ دشواری تھی،لیکن دفتر براے بین الاقوامی امور کی کا وشیں قابلِ تحسین ہے کیونکہ میں نے انہیں نوٹس میں لایا اور انہوں نے جلد از جلد حل کرلیا، مجھے خدشہ تھا کہ میں نے آخری تاریخ اور تعاون کو کھو دیا ہے۔ لیکن [او ای ایے] کی مدد میے وہ سب چیزیں تھی جس کی مجھے ضرورت تھی. [او ای ایے] نے مستقل رہنمائی کے ذریعہ درخواست کے لئے در کار تمام دستاویزات میں بھی میری فوری مدد کی.

5.  What do you plan to do after you have finish your studies in Taiwan? Would you like to stay in Taiwan?  Why? 

(English)

After I complete masters degree from AIM-HI, I plan to work in the manufacturing industry of Taiwan as my institute is having industrial collaboration with leading industries of Taiwan which have adopted cutting edge technologies, they will help me boost up my experience of real field knowledge before I can serve in the same field. My institute has the main purpose of helping the manufacturing industries of Taiwan adopt the new innovative ideas and bring innovation in the manufacturing sector, I would like to implement my knowledge and serve to the technological hubs of Taiwan. I would take the opportunity to learn from the manufacturing sector of Taiwan as they are already leading the automation and cutting edge technologies.

(Indian)

اے آی ایم -ایچ ای [ایم ہی]  سے ماسٹرز ڈگری مکمل کرنے کے بعد ، میں تایوان کی مینوفیکچرنگ انڈسٹری میں کام کرنے کا ارادہ رکھتا ہوں کیونکہ میرا انسٹی ٹیوٹ تایوان کی معروف صنعتوں کے ساتھ صنعتی تعاون کر رہا ہے جس نے جدید ٹیکنالوجی کو اپنایا ہے، وہ میرے حقیقی تجربے کو فروغ دینے میں مدد کریں گے میں اس شعبے میں خدمات انجام دینے سے پہلے فیلڈ سے متعلق معلومات-میرے انسٹی ٹیوٹ کا بنیادی مقصد تایوان کی مینوفیکچرنگ صنعتوں کو نیے جدید نظریات کو اپنانے اور مینوفیکچرنگ کے شعبے میں جدت لانے میں مدد کرنا ہے، میں اپنے علم کو نافذ کرنا اور تکنیکی مرکزوں کی خدمت کرنا چاہوں گا تایوان کا۔میں تایوان کے مینو فیکچرنگ سیکٹرسے سیکھنے کا موقع لوں گا کیونکہ وہ پہلے ہی آٹومیشن اور جدید ٹیکنالوجی کو آگے لے رہے ہے.

6.  How do you think studying in Taiwan can benefit you in your future career?

(English)

I am sure studying at CCU, Taiwan, and its prestigious institute AIM-HI will open doors for tremendous opportunities for my future career.i can easily get admission to prestigious institutes in the world specific to my field which was otherwise not possible. The practical knowledge that I gain from AIM-HI is itself industry-oriented the secure my and assure a better job in my field. Studying at the prestigious institute of Taiwan paved a way for me to look forward to getting admission in elite universities most of which have MOU with my university. Studying in Taiwan secured my career for a better job and higher studies abroad.

(Indian)

مجھے یقین ہے کہ سی سی یو تایوان میں تعلیم حاصل کرنا ہے اور  اس کا ممتاز انسٹی ٹیوٹ [ایم ہی] میرے مستقبل کے کیریئر کے زبردست مواقع کی راہیں کھول دے گا.میں اپنے فیلڈ سے متعلق دنیا کے نامور انسٹی ٹیوٹ میں آسانی سے داخلہ لے سکتا ہوں جو دوسری صورت میں ممکن نہیں تھا.عملی علم جو میں نے [ایم ہی] سے حاصل کیا ہے وہ خود صنعت پر مبنی ہے  جسے میری محفوظ ہو اور میرے شعبے میں ایک بہتر ملازمت کی یقین دھانی ہو۔تایوان کے ممتاز انسٹی ٹیوٹ میں تعلیم حاصل کرنے کے بعد مجھے ایلیٹ یونیورسٹی میں داخلہ لینے کی راہ ہموار ہوگیی جن میں زیادہ تر میری یونیورسٹی کے ساتھ [ام او یو] ہوتاہے۔تایوان میں تعلیم حاصل کر نے والی میری یونیورسٹی نے بیرون ملک بہتر ملازمت اور اعلیٰ تعلیم کے لئے اپنے کیریئر کو محفوظ بنایا۔

7.  What do you see as your key achievements when studying in Taiwan?

(English)

Studying here in Taiwan has added so much to my knowledge in many ways. I am happy to have the opportunity to work with the best professors who always have been helping and encouraging. I feel more motivated after learning a new programming language like C#, thus adds new tools and achievement to my list, I learned software like CUT PRO, SOLIDWORKS  and working to learn few more. T am happy to choose Taiwan as my new study place as my institute focuses so much on practical knowledge and industry and manufacturing-oriented study, so I got a chance to enhance my field knowledge. I have visited companies in the Industrial zone around my university, they helped me to achieve thein depth knowledge of the application of our studies.

(Indian)

تایوان میں یہاں تعلیم حاصل کرنے نے بہت سے طریقوں سے میرے علم میں بہت زیادہ اضافہ کیا۔مجھے خوشی ہے کہ بہترین پروفیسر ز کے ساتھ کام کرنے کا موقعہ ملا جو ہمیشہ مدد اور حو صلہ افزائی کرتے رہے ،  میں [سی #] جیسی میی پروگرامنگ زبان سیکھنے کے بعد زیادہ حوصلہ افزائی کرتا ہوں، میری فہرست میں نیے ٹولز اور کامیابی کو شامل کرتا ہے، میں نے [کٹ پرو]  اور[ سالٹ ورک] جیسے سافٹ ویئرسیکھا اور کچھہ سیکھنے کے لئے کام کر رہا ہوں،میں تایوان کو اپنے نیے مطالعےکے مقام کے طور پر منتخب کرنے پر خوش ہوں کیونکہ میرا انسٹی ٹیوٹ عملی علم ، صنعت اور تیاری پر بہت زیادہ فوکس کرتا ہے،مبنعی مطالعہ،لہزا مجھے شعبے کے علم کو بڑھانے کا موقع ملا، میں نے اپنی یونیورسٹی کے آس پاس صنعتی زون میں کمپنیوں کا دورہ کیا ہے، انھوں نے ہماری تعلیم کے استعمال کے بارےمیں انکی گہرائی سے معلومات حاصل کرنے میں میری مدد کی.

8. What advice do you have for other interested overseas students who want to come to Taiwan to study?

(English)

I encourage foreign students to start applying for studying in Taiwan and assure them the education system is empowering and enlightening ur career, you should add Taiwan to the next destination for studying. I want to advice new foreign students, please do not bother about not Chinese langyage, the teachers here are so much helpful and even most of the universities has adopted English based studies, although if your course is not available in English, the language centers here are so helpful and comprehensive that they will make your learning of Chinese so much fun and easy. Taiwan is the safest, peaceful and most beautiful place to study. I am sure you would love Taiwanese people and their wonderful culture.

(Indian)

میں غیر ملکی طلباء کی حوصلہ افزائی کرتا ہوں کہ وہ تایوان میں تعلیم حاصل کرنے کے لئے درخواست دے اور انہیں یقین دھانی دلاتا ہوں کہ تعلیی نظام اپ کے کیریئر کو مستحکم اور روشن کر رہا ہے، اپ کو مطالعہ کے لئے تایوان کو اگلی منزل میں شامل کرنا چاہیے،میں نیے غیر ملکی طالب علموں کو نصیحت کر نا چاہتاہوں کہ براہ کرم چینی زبان کی فکر نہ کریں، یہاں کے اساتذہ بہت مددگار ہے اور یہاں تک کہ بیشتر یو نیورسٹیوں نے انگریزی پر مبنی مطالعات کو اپنایا ہے،اگر چہ اپ کا کورس انگریزی میں دستیاب نہیں ہے ،یہاں کے زبان کے مراکز اتنے مدد گار  اور جامع ہے کہ وہ آپکی چینی زبان سیکھنے کو اتنا مزہ اور آسان بنا دے گے، تایوان تعلیم کے لئے سب سے محفوظ ، پرامن اور خوبصورت جگہ ہے، مجھے یقین ہے کہ آپ تایوان کے لوگوں اور ان کے حیرت انگیز ثقافت سے پیار کرینگے.